Home Bhimber News Geo VC MUST

Geo VC MUST

229
SHARE

میرپور(  جیو پاک نیوز )

طویل قانونی جنگ کے بعد  مسٹ یونیورسٹی کے شعبہ فزکس کے چئیرمین ڈاکٹر خضرالحق کو انصاف مل گیا- سپریم کورٹ نے ڈاکٹر خضرالحق کے گریڈ 21 میں پروموٹ کرنیکا حق تسلیم کرتے ہوئے انکی پروموشن کا حکم دیدیا- 2014ء میں ملنے والی گریڈ 21 کی پروموشن کیلئے

 ڈاکٹر خضرالحق کو 4 سال کی طویل قانونی جنگ لڑنا پڑی-

ٹیکنیکل فراڈ, جعلسازیوں اور سلیکشن بورڈ کے ڈاکومنٹس میں ٹمپرنگ کے ذریعے ڈاکٹر خضرالحق کو 4 سال تک نہ صرف انکے حق سے محروم رکھا بلکہ عدالتوں کے چکروں میں  الجھا کر انھیں شدید ذہنی کوفت میں مبتلا رکھا گیا  تاہم ڈاکٹر خضرالحق کو عدالتوں سے انصاف مل گیا-

ڈاکٹر خضرالحق نے میرٹ پر مبنی عدالتی فیصلوں پر اطمینان اور خوشی کا اظہار کرتے ہوئے اسے حق و سچ کی فتح قرار دیاہے-

دریں اثناء ڈاکٹر خضرالحق کو اس کامیابی پر پروفیسر نزرحسین,ذولفقار خلجی, پروفیسر خالد محمود,ریٹائرڈ ہیڈ ماسٹر محمدخورشید,سابق کونسلر اللّہ دتہ, ہیڈماسٹرریٹائرڈ چوہدری محمد شفیع, صوبیدار نزیر احمد اور دیگر نے حق وسچ کی فتح قرار دیا اورکہا کہ اپنے حق کیلئے ڈٹ جانے صبر و استقامت پر وہ مبارکباد کے مستحق ہیں -انھوں نے عدالتی فیصلوں کے تعریف کرتے ہوئے بھی اسے میرٹ اورحق وسچ کی فتح قراردیا- انھوں نے صدر آزادکشمیر اور اعلٰی عدالتوں سے مطالبہ کیا کہ ذہین افراد اور میرٹ پر پورا اترنے والوں کا ٹمپرنگ جعلسازیوں اور جائز ناجائز طریقوں سے راستہ روکنے والوں مستند جعلسازوں کے خلاف کارروائی کی جائے تاکہ وہ آئندہ اپنے ذاتی اور مذموم مقاصد کیلئے  سرکاری وسائل یونیورسٹوں کے پیسے اور وقت ضائع نہ کر سکیں اور انھیں اپنے کالے کرتوتوں کا خمیازہ بھگتنا پڑے- انھوں نے عدالتوں کے فراہمی انصاف کے اس اقدام کو زبردست الفاظ میں سراہا-

SHARE