Home Bhimber News Geo must vc

Geo must vc

218
SHARE

میرپور (جیو پاک نیوز) مسٹ یونیورسٹی میں میرٹ کی سر عام پامالی کے خلاف طلبا ء کا زبردست احتجاج اور مرکزی گیٹ‌کے سامنے دھرنا،

تفصیلات کے مطابق ہجیرہ آزاد کشمیر سے تعلق رکھنے والے طالب علم سردار یاسر جنھیں‌میرٹ پر آنے کے باوجود داخلہ نہیں دیا گیا، اور ہر ممکنہ حیلے بہانے سے طالب علم کو جامع سے باہر رکھنے کی کوشش کی گئی.

تنگ آکر کے یاسر نے یونیورسٹی کے مرکزی دروازے پر بھوک ہڑتال کی اور پانچ روز تک داخلے کے لئے یونیورسٹی کے دروازے پر بھوکا پیاسا بیٹھا رہا.
سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کی وجہ سے یاسر کی اس تحریک کو خوب تقویت ملی اور بے پناہ میڈیا کوریج کی وجہ سے ریاست بھر میں‌یونیورسٹی کے خلاف میرٹ پالیسیوں کی بھرپور مذمت ہوئی. ریاست بھر سے طلباء اور سول سوسائٹی کے لوگوں نے یاسر کی بھرپور حمایت کی.

شدید عوامی رد عمل کو دیکھتے ہوئے مسٹ نے یاسر کو داخلہ دینے کا وعدہ تو کرلیا لیکن اس کے بعد اسے ہر ممکنہ حیلے بہانے سے تنگ کرنا شروع کر دیا.

ہڑتال ختم ہونے کے بعد طالب علم نے ہر دروازے پر اپنے حق کیلئے دستک دی لیکن انتظامیہ اور چانسلر صاحب ٹال مٹول سے کام لے رہے ہیں، ممکنہ طور پر یاسر کی سیاسی وابستگی اسکے داخلے کی راہ میں رکاوٹ بن رہی ہے. اسی مدعے کو لیکر کے آج طلباء نے زوردار احتجاج کیا جس پر یونیورسٹی انتظامیہ نے پولیس کی بھاری نفری طلب کر لی ہے ،

تازی ترین اطلاعات کے مطابق طلباء نے یونیورسٹی کے مرکزی دروازے کے سامنے دھرا دے رکھا اور اپنے حق کیلئے شدید نعرے بازی کر رہے ہیں.

SHARE